1. This site uses cookies. By continuing to use this site, you are agreeing to our use of cookies. Learn More.
  2. آپس میں قطع رحمی نہ کرو، یقینا" اللہ تمہارا نگہبان ہے۔یتیموں کا مال لوٹاؤ، اُن کے اچھے مال کو بُرے مال سے تبدیل نہ کرو ۔( القرآن)

  3. شرک کے بعد سب سے بڑا جرم والدین سے سرکشی ہے۔( رسول اللہ ﷺ)

  4. اگر تم نے ہر حال میں خوش رہنے کا فن سیکھ لیا ہے تو یقین کرو کہ تم نے زندگی کا سب سے بڑا فن سیکھ لیا ہے۔(خلیل جبران)

یہ طفل مکتب بھی اب خسارے سمجھ رہے ہیں

'میری شاعری' میں موضوعات آغاز کردہ از سیدعلی رضوی, ‏مئی 23, 2019۔

  1. سیدعلی رضوی

    سیدعلی رضوی یونہی ہمسفر

    یہ طفل مکتب بھی اب خسارے سمجھ رہے ہیں
    یہ ساری باتیں یہ سب اشارے سمجھ رہے ہیں

    نیا زمانہ نئے نئےسے ہیں روگ ان کے
    یہ بچے تشبیہ و استعارے سمجھ رہے ہیں

    یہ راز ان سے نہاں نہیں ہے کہ درد کیا ہے
    یہ رنگ ،خوشبو، دھنک ،ستارے سمجھ رہے ہیں

    تمہاری آنکھوں میں نم ہے اور پھر یہ دشت رنگت
    تمہارے خوابوں کے ہم خسارے سمجھ رہے ہیں

    یہ نور تنہا نے سچ کہا ہے کہ سانسیں تھیں وہ
    یہ لوگ جن کو فقط غبارے سمجھ رہے ہیں

    ہمارے شعروں میں رنگ جلنے کی ایک بو ہے
    یہ بات پنچھی ندی کنارے سمجھ رہے ہیں

    وہ عکس روشن تھا اتنا بکھرا کہ آئینے سب
    زمیں کو امبر تو خود کو تارے سمجھ رہے ہیں

    ابو لویزا علی
     

اس صفحے کو مشتہر کریں